بچے کی پیدائش کسی بھی گھر میں خوشی اور مسرت کا باعث ہوتی ہے اور شوبز انڈسٹری میں اکثر لوگ اس خوشی کو سب سے یا تو شیئر کرتے ہیں یا خود ہی خبر ظاہر ہوجاتی ہے۔۔۔اندازے لگانے میں تو عوام ویسے بھی ماہر ہے اس لئے کوئی بھی شوبز کی خاتون ذرا سی بھی تبدیلی کے ساتھ آتی ہیں تو لوگ پہچان لیتے ہیں کہ اب کچھ عرصہ میں ان کے گھر سے خبر آجائے گی۔۔۔لیکن کچھ فنکار ایسے بھی ہیں جنہوں نے کانوں کان خبر نا لگنے دی کہ ان کی زندگی میں کچھ بھی ہونے جا رہا ہے۔۔۔

صنم بلوچ کی شادی سے لے کر بچے تک کی کوئی خبر عوام کو تو کیا شوبز کے لوگوں کو بھی نہیں تھی۔۔یہ ضرور علم تھا کہ وہ کینیڈا چلی گئی ہیں اور وہیں مستقل سکونت اختیار کرنے کا ارادہ رکھتی ہیں۔۔۔پھر یہ بھی خبر آئی کہ شادی ہوئی ہے لیکن کیونکہ کوئی بھی تصویر یا اس سے جڑا کوئی سرا ہاتھ نہیں آیا اس لئے لوگوں نے اس بات کو افواہ ہی سمجھا۔۔۔لیکن اب اچانک ہی انہوں نے اپنی ننھی پیاری سی بیٹی کے ساتھ تصاویر ظاہر کرنا شروع کیں اور پھر لوگوں کے سوالات کا سلسلہ شروع ہوگیا۔۔۔شادی کس سے ہوئی، بچی کا تو پتہ ہی نہیں چلا وغیرہ وغیرہ۔۔۔لیکن یہ کمال ہوگیا کہ صنم بلوچ نے اپنی خوشی کو چھپانے میں سب کو پیچھے چھوڑ دیا۔۔۔

نادیہ خان کا نام آتے ہی لوگوں کو لگتا ہے کہ اب ساری دنیا کی خبریں کسی نا کسی طرح کانوں میں پڑ ہی جائیں گی۔۔۔نادیہ خان نے اپنی شروع میں آنے والی دونوں خوشیوں سے عوام کو نا صرف باخبر رکھا بلکہ وہ اکثر شوز میں اس کے بارے میں معلومات اور سوالات بھی لاتی رہیں۔۔۔لوگوں نے پہلی بار کسی شو کی میزبان کو اتنا کھل کر اپنی زندگی کے اس اہم پہلو کو خود ہی مثال بنا کر پیش کرتے ہوئے دیکھا۔۔۔لیکن کچھ عرصہ قبل اچانک انہوں نے ایک فیملی تصویر شیئر کی جس میں وہ دو نہیں بلکہ تین بچوں کے ساتھ تھیں اور تیسرا بچہ کافی چھوٹا تھا۔۔۔یہ کب ہوا اور اس کے آنے کی کوئی خبر تک نا ملی۔۔۔یہ ایک ایسا سوال ہے جس نے عوام کو الجھا کے رکھا۔۔۔

اداکارہ عائشہ خان اگرچہ میڈیا کو خیر آباد کہہ چکی ہیں لیکن کیونکہ لوگوں کے لئے وہ آج تک ایک اسٹار ہیں اور رہیں گی اس لئے اکثر لوگوں کو امید تھی کہ جس طرح انہوں نے شادی کو سب کے سامنے دکھایا اسی طرح اولاد کی خوشی میں ساتھ ساتھ رکھیں گی۔۔۔لیکن عائشہ خان کی بیٹی کی خبر بھی اچانک ملی اور وہ تو ابھی بھی اس کی تصاویر دکھانے سے گریز کرتی ہیں کیونکہ انہیں لگتا ہے کہ لوگوں کو پھر کچھ بھی لکھنے کی آزادی مل جاتی ہے اور وہ نہیں چاہتیں کہ ان کی بیٹی کے متعلق کوئی کچھ بھی بولے۔۔۔انہوں نے لکھا کہ چاہے مجھے وہمی کہیں یا کچھ بھی مجھے اس کی پرواہ نہیں۔۔۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں